کربلا

 

وہ جس کا پرچم ہے کھلا

وہ جس کا پہرہ انما

وہ جس کا سہرہ ہے کسا

 جو ہے سکینہ کا چچا

آ اس کی جانب چل چلیں

کروانے عقدے حل چلیں

آ کربلا کی سمت آ

جس خاک پر ہے کبریا

کا سب کا سب جود و سخا

ہے گھر شہ لولاک کا

عباس و اصغر کا وہ گھر

اکبر کا جس میں ہے جگر

آلام و غم کو بھول جا

یاں پر شہ حاجت روا

کر دیتے ہیں عہدہ برا

وہ سید و مشکل کشا

صل علی کا ورد بن

افلاک سے تاروں کو چن

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s